in ,

سٹاک مارکیٹ میں آنے والی خوشگوار تبدیلی

جمعرات کے روز سٹاک مارکیٹ کراچی میں کے ایس ای KSE .100 انڈیکس میں 389 پوائنٹس کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا کیونکہ رواں سال تجارتی والیوم کافی بلندی تک پہنچا _ یہ خوشگوار تبدیلی اس ملاقات کا نتیجہ ہے جو آرمی چیف آف پاکستان جنرل قمر جاوید باجوہ اور تاجروں کے درمیان بدھ کے روز ہوئی جس میں تاجروں کے سیکیورٹی خدشات کو دور کرنے کی یقین دہانی کرائی گئی

مزید براں فوج کے سربراہ نے ان کی ہمت بندھائی کہ وہ آئیں اور بغیر کسی خوف کے سرمایی کاری کریں _ اگرچہ اس سے پہلے کافی خسارے کا سامنا بھی کرنا پڑا لیکن اس پر قابو پا لیا گیا اور ساتھ ہی ساتھ تجارت کے اختتام پر انڈیکس میں 32700 پوائنٹس کا اضافہ بھی کیا گیا , حالانکہ ایسا اضافہ کرنا ان حالات میں , جب عالمی منڈی میں تیل کی قیمتوں میں کافی اضافہ ہوا ہوا تھا , کافی مشکل بلکہ نا ممکن بکسی حد تک دکھائی دیتا تھا _ فائنینشل ایکشن ٹاسک فورس FATF کے سامنے سیکورٹی تحفظات کا اظہار کیا گیا جس کے بعد صورحال کافی بدل گئی , اور سال 2019 کے لیے مجموعی تجارتی والیوم بلند ترین سطح کو پہنچا جس کا شیئر 324 ملین تھا جس میں یونٹی شیئرز اور دوست سٹیلز کا مجموعی شیئر 30 ملین تھا

384 کمپنیوں کے سٹاکس میں سے 311 نے کافی بلند اڑان بھری _ ذرائع کے مطابق بیرون ممالک کی.کمپنیوں کے سرمایہ کاروں کا مجموعی شیئر کافی اچھا تھا جس کی مالیت 956.5% ریکارڈ کی گئ  اس اضافے کو مدنظرک رکھتے ہوئے مزید آنے والے دنوں میں کسی اچھی تبدیلی کی توقع ضرور کی جا سکتی ہے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

حکومت گرانے کیلئے مولانا فضل الرحمان کیا تدابیر استعمال کر رہے ہیں

حسین حقانی کے بعد ملیحہ لودھی بھی غدار نکلی