حسین حقانی کے بعد ملیحہ لودھی بھی غدار نکلی

0
112

خفیہ خط بھارت کو لیک کر کے عمران خان کا دورہ امریکہ ناکام کرنے کی کوشش
پاکستان کے سرکاری افسران و بیوروکریٹ کی کثیر تعداد وطن فروش اور غدار ہے

یاد رہے کہ ملیحہ لودھی کی بہو ہندوستانی ہے، ان کے بیٹے فیصل کی شادی انڈیا کے ایک ہندو گھرانے میں ہوئی ۔ نئی دہلی کے ایک ایلیٹ کلاس گھرانے سے تعلق رکھنے والی ان کی بہو گوریکا گھمبیر شروانی نے اپنا مذہب و نام تبدیل نہیں کیا، صرف اپنے نام کے آخر میں “شروانی” لگا کر وہ فیصل شروانی کی بیوی بنی ہیں۔

ملیحہ لودھی کی سمدھن کیشی گھمبیر انتہائی متحرک خاتون ہیں۔ اگر آپ فیس بک پر ان کا پبلک پروفائل دیکھیں تو دنیا بھر کے مختلف ممالک میں ان کے وزٹ اور پاکستان، بھارت، سنگاپور، برطانیہ و امریکہ کی ایلیٹ کلاس پارٹیوں میں شرکت حیران کر دے گی۔ وہ بی جے پی اور بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کی زبردست حامی ہیں۔ مقبوضہ کشمیر کے حوالے سے نریندر مودی کی پالیسیوں کی تعریف و حمایت کرتی ہیں۔ کیشی گھمبیر پاک بھارت تعلقات کو بہتر بنانے کے لیے کاوشیں کرتی بھی نظر آتی ہیں۔

انہوں نے اگر بیٹی کی شادی ملیحہ لودھی کے بیٹے سے کی ہے تو اپنے گھر بھی کراچی سے بہو لائی ہیں۔ جی ہاں کیشی گھمبیر کے بیٹے ادیتہ کی شادی کراچی میں شرمین نامی لڑکی سے ہوئی ہے۔ حیران کن طور پر اس جوڑے نے بھی نام و مذہب نہیں بدلے۔ یہ سنگاپور میں رہتے ہیں۔ کیشی گھمبیر اپنی بہو شرمین کے خاندان سے ملنے اور شادی و دیگر تقریبات میں شرکت کرنے اکثر پاکستان بھی آتی رہتی ہیں۔ شرمین کا خاندان کراچی کے امیر گھرانوں میں شامل ہے، اس کی بہن ماہین کریم کے نام سے مہنگے کپڑوں اور فیشن ڈیزائننگ کا برانڈ چلاتی ہیں۔ اس خاندان کے اثر و رسوخ کا اندازہ اس سے بھی لگا لیں کہ پاکستان کے سب سے بڑے میڈیا گروپ جنگ کے انگریزی روزنامے دی نیوز میں ان کا مکمل انٹرویو شائع ہو چکا ہے جس میں وہ اس بین المذاہب شادی کی افادیت بتا چکے ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here